فلرٹی بادشاہ ۔۔

میں جب ساتویں جماعت میں تھی تو اسکول میں ایک میلہ لگایا گیا تھا اُس میں بہت ساری چیزوں کے اسٹالز تھے میں نے ایک اسٹال پر ایک سفید رنگ کی چھوٹی سی مسجد جس میں لال اور ہری روشنی جل بجھ رہی تھی دیکھی تو سوچا یہ لے لوں میں نے اُسے مسجد سمجھا تھا مگر وہ پلاسٹک کا بنا ہوا تاج محل تھا ۔۔ وہ مجھے اتنا اچھا لگا کہ میں نے وہ خریدا اور سنبھال کر شوکیس میں رکھ دیا ۔۔ اُس کے بعد جب بھی مارکیٹ جاتی تو شو پیس کی دکان پر تاج محل ہی تلاش کرتی کہ جہاں اچھے سے اچھا ملے میں لے لوں ۔۔۔۔۔۔
اسکول کے زمانے میں پڑھائی کے علاوہ فلمی گانوں یا فلم دیکھنے کا نہ تو شوق تھا نہ ہی اس بارے میں زیادہ معلومات تھیں ۔۔ کالج میں آئی تو کچھ پر نکلے اور کالج کی سہیلیوں سے اور کچھ مِنی بس میں چلنے والے فلمی نغمے سُن سُن کر گانے سننے کا شوق ہوا تو پرانے فلمی نغمے اور فلمیں ہی دل کو بھائے ۔۔ ایک شہنشاہ نے بنوا کے حسیں تاج محل ساری دنیا کو محبت کی نشانی دی ہے ۔۔۔ جو وعدہ کیا وہ نبھانا پڑے گا روکے زمانہ چاہے تم کو آنا پڑے گا ۔۔
یہ دونوں گانے سننے کے بعد تاج محل دیکھی اور تاج محل کے حسین مناظر دیکھ کر ۔۔ تاج محل کے بارے میں پڑھ کر کہ چاندنی راتوں میں اور خاص کر چاند کی 14 کو تاج محل کا نظارہ دیکھنے کے لیئے دنیا بھر سے لوگ آتے ہیں ۔۔۔ اتنا کچھ جاننے کے بعد تاج محل کے حسن میں ایسی کھوئی میں کہ صرف یہ یاد رہا کہ محبت کی یہ لازوال نشانی دیکھنے ایک دن ضرور جاؤں گی ۔۔
شاہجہاں کے بارے میں مزید کچھ پڑھا ہوتا تو آج صدمہ نہ ہوتا 😦 ممتاز کے مرنے کے بعد شاہجہاں ایک طرف تو ایسا دکھی ہوا کہ 2 سال تک سوگ مناتا رہا ۔۔ سلطنت میں 2 سال تک موسیقی نہیں بجائی گئی نہ کوئی تقریب اور جشن ہوا ۔۔ پھر شاہجہاں نے محبت کی نشانی بنانے کا حکم دیا اور دوسری طرف اُس نے ممتاز کی بہن سے شادی کر لی واہ کیا محبت تھی ۔۔۔۔ جب سے یہ بات پتہ چلی ہے آج کل کے عاشقوں کی طرح شاہجہاں بھی فلرٹی لگنے لگا ۔۔۔۔
ہونا تو یہ چاہیئے تھا کہ ممتاز کے مرنے کے بعد تاج محل کی تعمیر میں حصّہ لیتے لیتے شاہجہاں گزر جاتا پھر ہوتی لازوال محبت کی نشانی ۔۔ پتہ نہیں یہ بھی سچ ہے یا جھوٹ کہ ممتاز کے مرنے کے بعد شاہجہاں کے بال سفید ہوگئے تھے ایک رات کے اندر یا یہ صرف فلم میں تھا اللہ جانے 🙄
خیر چاندنی رات میں تاج محل دیکھنے کا ارادہ تو نہیں بدلا مگر اب ۔۔۔ تاج اور محل الگ الگ اچھے لگ رہے ہیں اور سنگِ مرمر کا وہ تاج محل جو کچھ ماہ پہلے لیا تھا اُس کو محبت کا مزار سمجھ کے ( پہلے محبت کی نشانی سمجھتی تھی ) اُس پر پڑنے والی گرد بھی کچھ دنوں سے صاف نہیں کی 😦

44 تبصرے »

  1. عثمان Said:

    ” ۔ ۔ ۔ کالج میں آئی تو کچھ پر نکلے ۔ ۔ ۔ ” 😛

  2. کیوں محل بناتے مر کے لازوال ہوتا؟
    باد شاہ نہ ہوا قربانی بکرا ہوا جی۔
    کوئی یونیورسٹی بناتا تو شاید لازاوال بھی ہوجاتا۔

  3. شاہجہان محبت تو واقعی بہت کرتا تھا ممتاز سے اور اسکا ثبوت یہ ھے کہ ممتاز کی موت چودھویں بچے کی پیدائش میں ہوئی تھی، اب آپ اندازہ کرسکتی ہیں کہ کتنی محبت کرتا تھا شاہجہان ممتاز سے۔

  4. ممتاز کی بہن سے شاہ جہاں نے شادی ممتاز سے محبت ہی کی وجہ سے کی۔ اس کو ممتاز کی بہن میں ممتاز کا ہی عکس نظر آتا تھا۔

  5. ویسے میں نے تو یہ پڑھا تھا کہ شاہجہاں نے دوسری شادی نہیں کی تھی۔ آج آپ سے سن رہا ہوں کہ اس نے ممتاز کی بہن سے شادی کر لی تھی۔

  6. Jafar Said:

    آپ کو اعتراض کس پر ہے ؟
    شاہجہاں پر؟
    دوسری شادی پر؟
    تاج مھمل پر؟
    یا ممتاز کی بہن پر؟

  7. ویسے تو اس دوسری شادی والی بات میں نا تو شرعی طور پر کوئی حرج تھا،
    اور نہ ہی اس کی معاشرت آڑے تھی، کہ اسوقت بادشاہوں کی کئی کئی شادیاں رواج تھیں۔
    یہ شاید آپ کے اندر چھپی اس معاشرے کی عورت بول رہی ہے جو سوکن برداشت نہیں کر سکتی۔
    لیکن اس میں قصور آپ کا بھی نہیں ہے ہمارے معاشرے میں دوسری بیوی کے آتے ہی پہلی بیوی سے ناطہ تقریبا ٹوٹ جاتا ہے۔
    لیکن میرے خیال میں اگر شاہجہاں نے ایسا کیا تو کچھ برا نہیں کیا، کم ازکم اس نے ممتاز کی زندگی میں شادی نہیں کی۔
    اس کے پیار کا یہی ایک ثبوت کافی ہے کیونکہ جب تک ممتاز زندہ تھی تب تک اس کا حرم اس کے سوا کسی اور نے آباد نا کیا۔

  8. سارہ Said:

    بھئی بادشاہ نے سچے مسلمان ہونے کا ثبوت دیا نہ .. بیوی مر گئی تو دوسری شادی کر لی .:D. محبت اپنی جگہ شریعت اپنی جگہ ..

    ویسے ممتاز بھی اس کی پہلی بیوی تو نہین تھی شاید ..

  9. امن ایمان Said:

    حجاااااااااب یہ پوسٹ پڑھ کر باقی باتیں اپنی جگہ۔۔۔۔لیکن محبت کے بارے میں اتنی عمدہ ریسرچ پلس جمالیاتی حس۔۔۔۔۔۔۔۔یہ دونوں چیزیں یکجا ہوں تو انسان اچھا خاصا شاعر بن جاتا ہے۔۔۔آپ شاعری پے طبع آزمائی کرو ناااااااااااا

  10. hijabeshab Said:

    عثمان ۔۔ جی ہاں “ پر “ نکلے اور میں پری بن گئی ۔۔ جبھی م س ن پر اپنا نام ایک پری رکھا ہوا ہے میں نے ۔۔ اور ہاں ذرا دھیان رہے پرستان میں اندھے غار اور کنوئیں بھی ہوتے ہیں آپ کو رہنا ہے وہاں 😛

    یاسر خواہ مخواہ جاپانی ، سچّی محبت کے اظہار کے لیئے قربان ہو جاتا تو کیا ہو جاتا ۔۔۔

    فکرِ پاکستان ، 14 بچّوں کا محبت سے کیا تعلق بھلا ۔۔ بچّے تو اُن کے بھی ہوتے ہیں جن کی ہر وقت لڑائی ہو ۔۔

    احمد عرفان شفقت ۔۔ تاج محل تو بلاوجہ بنوایا ناں پھر ۔۔

    ابو شامل ، مجھے بھی نہیں پتہ تھا مگر جب سے ایک اچھے رائیٹر کی لکھی ہوئی بات میں یہ ذکر پڑھا تب سے 😦

    جعفر مجھے اعتراض نہیں صدمہ ہے صرف اس بات پر کہ شادی کیوں کی ۔۔ جب اتنی محبت تھی تو تاج محل بنوا کے ممتاز کے مقبرے کے سرہانے باقی دن کیوں نہ گزارے ۔۔

    بلاگ پر خوش آمدید ماجد چوہدری ، آپ نے جو بات لکھی وہ تو میں نے سوچی بھی نہیں تھی ۔۔ مجھے صرف شاہجہاں کی شدید محبت کے بعد محبت کی یادگار بنوانا اور پھر شادی کر لینے پر صدمہ ہے ۔۔ تاج محل کا ڈرامہ بلاوجہ کیا ۔۔

    سارہ ہر بیوی کے کرتا تاج محل ۔۔ اور جب ایک سے ہی اتنی محبت تھی تو بعد میں شادی کیوں کی 😕

    امن ، شاعری میں آزاد نظم بہت ساری لکھی تھیں مگر جس نے بھی پڑھی یہی پوچھا کتنے عشق کیئے ہیں جو ناکام ہوگئے ۔۔ وضاحتیں دینا اچھا نہیں لگا لکھنا چھوڑ دیا ۔۔

  11. عثمان Said:

    او جی پریوں کا ساتھ ہو تو اندھے غار اور کنویں کیا ، بندہ جہنم میں بھی رہنے کو تیار ہوجائے۔ 😛😛

  12. آپ کوئی ایسا بادشاہ بتائیں جو “فلرٹی” نہ ہو گزرا ہو؟۔

    • شگفتہ Said:

      جاوید گوندل بھائی ، میں اگر غلطی پر نہیں ہوں تو برطانیہ کی بادشاہت میں ایک ایسی مثال تاریخ میں موجود ہے ۔

      • شگفتہ۔ بہن جی!
        کہیں آپکے کہنے کا یہ مطلب تو نہیں کہ انگلستان کے ایک شاہی فرد نے ایک امریکن لیڈی سے “فلرٹ” یا محبت کچھ بھی کہہ لیں کی وجہ سے انگلستان کا تاج ٹھکرا دیا تھا۔ تو ایسی صورت میں تو بادشاہ تو تھا ہی نہیں 🙂

        بہر حال تاریخ میں کچھ صاحب اقتدار لوگ یا بادشاہ البتہ ایسے ضرور ہو گزرے ہیں جنہوں نے فلرٹ نہیں کیا۔اور اس بارے انتہائی شرافت سے زندگی گزاری

  13. شگفتہ Said:

    مسجد🙂

    مجھے بھی جب تک تاج محل کے بارے میں نہیں معلوم ہوا تھا تو یہ مسجد ہی لگا کرتا تھا ۔

    حجاب ، اگر لوگوں کی باتوں پر توجہ دیں تو لوگ سانس بھی نہیں لینے دیں گے ۔ یہاں انٹرنیٹ کی دنیا میں بھی اندازے لگانے والوں کی کمی نہیں ہوگی ، اس لیے صرف ان لوگوں سے شیئر کریں جو ہلکی سوچ اور ہلکے پن کا مظاہرہ نہ کرتے ہوں ۔ لیکن اللہ تعالی نے جو بھی تخلیقی صلاحیت عطا کی ہو اس کا اظہار کرنا اچھی بات ہے ، امن نے بہت اچھی بات کہی ہے ۔

  14. توبہ توبہ حجاب ،
    تم نے شاہجاں کو بھی نہ بخشا جو بادشاہ ہو کر بھی اتنا زوجہ پرست تھا🙂 ورنہ بادشاہت اور محبت کی نشانی بنانا ۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔۔ باقیوں سے سبق نہ سیکھا اس نے۔

    فلرٹ کا لفظ تو انتہائی سخت ہے کہ ایک تو اس نے مملکت کی اتنی دولت تاج محل پر لگا دی جس سے وجہ سے کہا جاتا ہے کہ مغلیہ سلطنت ہی زوال کا شکار ہو گئی معاشی طور ۔ دوسرا شادی تو ضرورتا اور بہت سی اور وجوہات کی وجہ سے ہو سکتی ہے اس سے اس کا ے وفا اور فلرٹی ہونا تو قطعا نہیں بنتا

    شکر ہے آج شاہ جہاں یہ سننے کے لیے زندہ نہیں🙂

    ویسے مجھے بھی مسجد کی ہی طرح لگتا تھا اور یادگار تو ایسی قائم کی ہے کہ اب سیاحتی طور پر خاصی منافع بخش بھی ہے انڈیا کے لیے تو دیر سے سہی پر فائدہ کر دیا عوام کا بھی اس نے۔

  15. بھئی بادشاہ نے سچے مسلمان ہونے کا ثبوت دیا نہ .. بیوی مر گئی تو دوسری شادی کر لی .:D. محبت اپنی جگہ شریعت اپنی جگہ ..از طرف سارہ

    بی بی! آپ کو اعتراض دوسری شادی پہ پے؟
    یا مسلمان ہونے کی سچائی کا ثبوت دینے کے لئیے شرعی شادی پہ ہے؟۔
    یا بالفاظِ دیگر آپ یہ کہنا چاہتی ہیں کہ پہلی بیوی کے مرنے کے بعد دوسری شادی کرنا صرف “سچے مسلمان” کا شیوہ ہے؟۔
    چونکہ مندرجہ بلا سبھی صورتوں میں “شریعتی” نکاح کا جواز بنتا ہے اور آپ شاید کہنا چاہتی ہیں کہ بغیر شر یعیت کے کام چلا لینا ہی مرحومہ بیوی سے محبت کی معراج ہے؟

    بی بی! مجھے علم ہے کہ آپ نے ازرا راہ تفنن چلتے چلتے شریعت اور مسلمانی سے زمانے کا چلن نباہنا یعنی ٹھٹھا کرنا اپنا فرض سمجھا ہے اور میری رائے میں یہ درست رویہ نہیں۔ آپکی اطلاع کے لئیے عرض کرتا چلوں کہ پہلی بیوی کے مرنے کے بعد دوسری شادی کرنے پہ صرف مرد حضرات کو ہی “سچے مسلمان” ہونے کا “شریعتیَ حق حاصل نہیں۔ بلکہ پہلا خاوند مر جانے پہ خاتون کو دوسری شادی کرتے ہوئے “سچے مسلمان” ہونے کا “شریعتی” حق حاصل ہے۔

  16. تصیح۔۔۔۔

    خاتون کو۔ ۔ ۔ ۔ ۔بھی۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ ۔ دوسری شادی کرتے ہوئے “سچے مسلمان” ہونے کا “شریعتی” حق حاصل ہے۔

  17. zafriusa Said:

    میں یہاں‌ موضوع کے اعتبار سے محب سے ملتا جلتا کوئی تبصرہ کرنے آیا تھا ۔ مگر آخری تبصروں کو دیکھ کر اوپر نظر گئی تو اپنا ارادہ ترک کردیا کہ کوئی شوخ تبصرہ کیا جائے ۔ بات دوسری شادی کے حوالے سے ہو رہی ہے اور اس کو اسلام اور شریعت سے جس طرح نتھی کیا جاتا ہے ۔ وہ سراسر غلط فہمی پر مبنی ہے ۔ اسلام میں‌ کوئی ایسی شق موجود نہیں‌ ہے کہ مرد کو چار شادیاں کرنا چاہئیں ۔ یا بیک وقت چار بیویاں رکھ سکتا ہے ۔ اسلام سے پہلے دورِ جہل میں‌ بیک وقت بےشمار شادیاں کا رواج تھا ۔ اور اکثر لوگ پچاس سے زائد بیویاں رکھتے تھے ۔ اسلام نے اس بہتات پر پابندی لگائی ۔ اور ان کو صرف چار تک محدود کردیا ۔ یہ کوئی شرعی یا حکمِ ابدی نہیں‌ تھا اور نہ ہی اس سے یہ مراد تھی کہ ہر انسان کو بیک وقت چار بیویاں رکھنے کا حق حاصل ہے ۔ بلکہ ایک وقت میں کثرت نکاح کی جو پیچیدگیا ں پیدا ہو رہیں‌ تھیں ۔ ان کا فوری ازالہ تھا ۔ جس طرح غلامی کے خاتمے کے لیئے اسلام نے مختلف مراحل میں‌ بتدریج قدم اٹھائے ۔ بلکل اسی طرح اُس معاشرے میں موجود دیگر خرابیوں کے لیئے بھی اسلام نے سہل اور آسان راستے منتخب کیئے۔ چونکہ اسلام کسی انقلاب کے لیئے نہیں آیا تھا ۔ اس لیئے انسان کی دنیا میں اور دنیا کے بعد آنے والے مراحل کی عین انسانی فطرت کے مطابق تربیت کی ۔ آج معاشرے میں چار شادیوں کا رواج بہت حد تک ناپید ہوچکا ہے ۔ کیونکہ اصلاح کا مرحلہ اپنے تکمیل کے مراحل سے کامیابی سے گذر چکا ہے ۔ انسان آج جب دوسری شادی کا سوچتا ہے تو اس کے سامنے اپنی خواہشوں کی ترجیحات کے علاوہ بہت سے ذمہ داریوں اور حقائق کا منظر بھی سامنے ہوتا ہے ۔ لہذا اس کے لیئے ممکن نہیں‌ ہے کہ وہ ایک خوشحال زندگی میں کسی قسم کا ہیجان برپا کرے ۔ مگر ہمارے معاشرے میں ‌دوسری ، تیسری اور پھر چوتھی شادی کو جس طرح اسلام اور شریعت سے منسلک کیا جاتا ہے ۔ وہ انتہائی غلط رویہ ہے ۔خالق سے بہتر مخلوق کو کون جان سکتا ہے ۔ اس لیئے اللہ نے بھی حضرت آدم علیہ السلام کے لیئے صرف ایک بیوی تخلیق کی تھی ۔۔۔۔ چار نہیں ۔

    • عثمان Said:

      بھائی جان ، آپ نے تجدد کی بات کرکے بہت بڑا “گناہ” کر ڈالا ہے۔ شائد آپ جانتے نہیں کہ جن سے آپ مخاطب ہیں وہ تو بس چلے تو لونڈی حلال کر ڈالیں ، آپ کثرت نکاح کو لئے بیٹھے ہیں۔🙂

      بہرحال بیچاری خواتین تو ہلکا پھلکا سا مزاق کر کے پھنس گئی ہیں۔😦

  18. بی چاری اور بے چارے؟ ۔ چارہ لڑانے کو صرف دین ۔ ورنہ بے چارے۔

  19. عثمان Said:

    خواتین و حضرات !
    اپنے تجدید ایمان کا حلف اٹھا کر مذکورہ ٹھیکیدار کی تسلی کروائیں۔ ورنہ ایک اور “جہاد” شروع ہونے کا خدشہ ہے۔😛

  20. کچھ لوگوں کو ہر وقت وہم سا ہوتا ہے کہ جو وہ فرمان کرتے ہیں اس پہ لازمی طور تمام “خواتیں و حضرات” انکی ہدایات پہ عمل کریں۔

    کیا یہ روشن خیال انتہاء پسندی سمجھی جائے؟۔

  21. عثمان Said:

    نہ جی ، دراصل کچھ لوگوں کو یقین ہوتا ہے کہ ہروہ شخص جو ان کے تصورات اور جذبات شئیر نہیں کرتا اور ان کے الفاظ میں بات نہیں کرتا ، اسلام ، پاکستان اور امت کا “دشمن” ہے۔ ایسے لوگ ساری عمر دوسروں کا ایمان ماپ کر اور پندونصائح کرکے اپنا “ایمان” مظبوط کرنے میں لگے رہتے ہیں۔

  22. دین پہ چوٹ برائے تذلیل کسی بھی مسلمان کی غیرت کو گواراہ نہیں ہوتی۔ خواہ وہ کس قدر گیا گزرا مسلمان ہی کیوں نہ ہو۔

    نوٹ۔: البتہ غیر مسلم(سبھی نہیں) اور منافقین (تمام) ایسی چوٹ پہ اچھلتے اور پُھدکتے ہیں۔

  23. عثمان Said:

    قارئین کرام !
    کام شروع ہوچکا ہے۔ ٹھیکیدار صاحب کے فرمودات پر لبیک کہہ دیں اس سے پہلے کہ آپ کی مسلمانی مشکوک ٹھہرا دی جائے۔😛

  24. سارہ Said:

    جاوید صاحب آپ جب کسی کو کوئی دینی بات سمجھایا کریں تو لہجہ طنزیہ نہ کیا کریں کیونکہ آرام سے سمجھائی گئی بات ہو سکتا ہے کوئی سمجھ بھی جائے .. طنزیہ لہجہ اچھا اثر نہیں چھوڑتا ..
    ءثمان آپ کو بھی یہی مشورہ ہے کہ کسی کو غط ثابت کرنے کے لئے الٹا سیدھا بولنے کے بجائے اصلاح کی کوشش کریں .. نہیں کر سکتے تو خواہ مخواہ پنگا نہ لیا کریں
    ظفری معلومات میں اضافہ کرنے کا شکریہ ..

    • عثمان Said:

      😦

    • سارہ بی بی!
      مجھے از حد ا افسوس ہے کہ میری کسی بات کو آپ نے طنزیہ سمجھا اور آپ کو قلق ہوا۔ واللہ میرا مقصد آپ کا دل دکھانا نہیں تھا بلکہ ایک دینی پوائنٹ آؤٹ کرنا تھا کہ پہلی بیوی کی شادی کے بعد نہ صرف مرد کو دوبارہ شادی کرنے کی اجازت ہے بلکہ بعین اسی طرح پہلا خاوند فوت ہوجانے کی صورت میں ایسا حق خواتین کو بھی شر یعیت میں حاصل ہے۔

      بس اتنی سی بات تھی کہ شر یعت اس بارے مردو زن دونوں کے حقوق کا خیال کرتی ہے۔

      بہر حال امید کرتا ہوں کہ آپ اپنی رنجش دور فرما لیں گی۔

      • سارہ Said:

        ager badshah ki jaga malika ki baat hoti to men yehi baat malika k liye kehty k bewa hone k baad doosry shadi kr k sharayi farz nibhaya..ap ko aisa kion laga k men ne ye kehne ki koshish ki islam ne tafreeq rakhi hai mard w oret k muamilat men ? ya oret ko doosry shadi ka haq nhi .. ? Aa a muslim itny buniyadi baat to mujhe pata hai.. phir b ap k batane ka shukriya…

  25. امن ایمان Said:

    یا اللہ ہمیں سیدھی بات کرنے اور سمجھنے کی توفیق عطا فرما آمین۔

    حجاب مجھے یاد آگیا یہ بات آپ نے پہلے بھی کہی تھی کہ شاعری پر کمنٹس کی وجہ سے آپ اپنا لکھا پوسٹ نہیں کرتیں تو یہ غلط بات ہے۔۔۔۔۔مجھے دیکھ لیں۔۔۔میری شاعری ایک تسلسل سے پڑھی جائے تو یہی لگتا ہے کہ ایک آدھ عشق تو ضرور ہی ہوچکا ہے لیکن پھر میں نے ہر نظم کا بیک گراؤنڈ لکھا تو یہ غلط رائے قائم کیے جانے کا خوف بھی دل سے نکل گیا۔۔۔۔آپ بھی ضرور سوچیے گا۔

  26. hijabeshab Said:

    عثمان اندھے غاروں میں صرف قیدی رہتے ہیں پری کا کام قید کرنا ۔۔

    جاوید گوندل صاحب مجھے کسی اور بادشاہ سے کوئی دلچسپی نہیں کہ اُس نے کیا کیا ۔۔ مجھے ممتاز کی محبت میں شاہجہاں کے محل بنوا کے شادی کرنے کا پتہ چلنے پر صدمہ ہوا ہے اب اس صدمہ کو قاری حضرات اپنی سوچ کے مطابق ہر طریقے سے سمجھ سکنے میں آزاد ہیں ۔۔

    محب شاہجہاں کے علاوہ اور کون ہیں جن کو نہیں بخشا میں نے نام بتایا جائے ۔۔ فلرٹ کا لفظ بلکل سخت نہیں ہے ذرا اپنے صنف کے دکھ سے باہر نکل کے پڑھیں 😛

    شگفتہ اور امن خوف تو خیر کوئی نہیں مجھے ۔۔ عشق کر بھی لوں تو کیا میری لائف ہے جتنے عشق کروں😛 ۔۔ آپ دونوں کی بات زیرِ غور ہے 🙂

    باقی جو باتیں ہوئیں ہیں اُس کے لیئے صرف اتنا کہوں گی کہ اسلام کے حوالے سے ہر بحث صرف وجہء لڑائی بنتی ہے ، اگر کسی شخص کو کسی دوسرے کی دین کے حوالے سے کسی بات پر اعتراض ہوتا ہے تو وہ اپنی مرضی دوسرے پر مسلّط کرنے سے گریز کیوں نہیں کرتا ، اس لیئے کہ خود وہ بھی تو سامنے والے شخص کی کہی بات نہیں اپناتا پھر بحث اور لڑائی کیوں ۔۔

    • بی بی!

      بادشاہ تاج محل مزار بنوا کر شادی کرتا یا شادی کر کے تاج محل بنواتا ۔ اس عمل سے ہندوستان کے باشندوں کو کوئی خاص فرق نہیں پڑتا۔ فرق تو اسصورت میں پڑتا جب یہ سارے بادشاہ جو اپنے آپ کو ظل الہٰی اور خدا جانے کیا کچھ کہلواتے تھے ۔ اگر ہندوستان کے عام باشندوں کا معیار زندگی اور تعلیمی استعداد بہتر کرنے کے لئیے کچھ جستجو کرتے تو اتنا بڑا ہندوستان ایک پورا بر صغیر اپنی جہالت اور غربت کے ہاتھوں اور اس پہ بسنے والی قومیں ساری دنیا کے سامنے ہاتھ پھیلائے گداگروں کی سی زندگی نہ گزار رہی ہوتیں۔

      آج جو بر صغیر کے مسلمانوں کے جو حالات ہیں ان حالات کا بیج اس دور اور اس سے قبل اور بعد میں آنے والے بادشاہوں نے رکھا تھا۔

  27. عثمان Said:

    اوجی پری جب انسان کو پرستان میں قید کرے گی تو اندھے کنوئیں میں ہی قید کرے گی نا😛

  28. zafriusa Said:

    بے شک “باقی باتیں “ بعد میں ہوئیں مگر کم از کم میں‌ نے قطعاً کوئی بات مذہبی رنگ میں کہنے کی کوشش نہیں‌ کی ۔ بلکہ تاریخی حوالاجات پیش کیئے ہیں ۔ بات چونکہ اسلام اور مذہب کے تناظر میں ہورہی تھی ۔ اس لیئے اس حوالے سے صرف تاریخ کا حوالہ دینا مناسب سمجھا ۔ سو اس سلسلے میں ‌نہ کوئی حدیث پیش کی گئی اور نہ ہی کسی آیت کا ذکر کیا اور نہ ہی کسی مفتی کے کسی فتویٰ کا حوالہ دیا ۔

  29. zafriusa Said:

    سارہ ۔۔۔ آپ کے شکریہ کا شکریہ ۔🙂

  30. hijabeshab Said:

    جاوید گوندل صاحب اتنی گہرائی میں جا کر اگر سوچتی تو تحریر نہ لکھتی ۔۔ بحرحال رائے دینے کا حق سب کو ہے شکریہ ۔۔

    ظفری آپ کی بات پر کچھ نہیں لکھا تھا سب کی بات کی تھی ۔۔

  31. سچ کہوں تو۔۔۔ بس ریزن ایبل پوسٹ ہے۔۔۔ لیکن پانچ سو الفاظ کی پوسٹ پر پانچ ہزار الفاظ کے کمنٹ دیکھ کر جلن ہو رہی ہے۔۔۔ لکی یو۔۔۔

  32. hijabeshab Said:

    نعیم اکرم ملک شکریہ ۔۔ اور جلنے کے توڑ کے لیئے مجھے مرچیں پوسٹ کرنی چاہیئں اب 😛

  33. ایک دو دن صبر کر لیں، جب کمنٹس آنا کم ہو گئے تو کمنٹس کو سات سے ضرب دے کر جتنی مرچیں بنی جلا لینا۔ کِلو ساری مرچیں جلانی پڑیں گی میرا خیال ہے۔۔۔

  34. hijabeshab Said:

    نعیم جب پوسٹ پرانی ہو جائے تو کمنٹس نہیں آتے اُس پر ۔۔ اور کبھی کبھی نئی پوسٹ پر بھی نہیں آتے اس لیئے پرواہ نِشتہ ۔۔

  35. امن ایمان Said:

    🙂

  36. حِجاب میں بھی جل رہی ہُوں اب لیکِن یہ جلن ویسی نہیں ہے بہُت پیار آرہا ہے کہ ماشاءاللہ اِتنا پیارا لِکھتی ہو،،،
    اللہ کرے زورِقلم اور زیادہ،،
    مُجھے ایسا لگ رہا ہے کہ یہ سارا کریڈِٹ مُجھے جا رہا ہے پتہ نہیں کیُوں ؟؟؟
    یا یہ سب میں ہی ہُوں من و تُو کا فرق شاید اِسی کو کہتے ہیں،،،

  37. hijabeshab Said:

    شکریہ شاہدہ آپی ۔۔ 🙂


{ RSS feed for comments on this post} · { TrackBack URI }

جواب دیں

Fill in your details below or click an icon to log in:

WordPress.com Logo

آپ اپنے WordPress.com اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Twitter picture

آپ اپنے Twitter اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Facebook photo

آپ اپنے Facebook اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Google+ photo

آپ اپنے Google+ اکاؤنٹ کے ذریعے تبصرہ کر رہے ہیں۔ Log Out / تبدیل کریں )

Connecting to %s

%d bloggers like this: